حسد اقوال

٭ حسد سے اپنے آپ کو بچائو اس لیے کہ حسد نیکیوں کو اس طرح کھا جاتا ہے جس طرح لکڑیوں کو آگ۔ ابو دائود

٭ قناعت بدن کو تازگی بخشتی ہے اور حسد بدن کو گلا دیتا ہے۔ حضرت سلیمان

٭ حسد ایک آگ ہے جو انسان کو جلاتی ہے اور دوسروں کو عداوت پر ابھارتی ہے۔ امام حسن علیہ السلام

٭ دروغ گو کو مروت نہیں اور حاسد کو راحت نہیں ہوتی۔ امام جعفر صادق

٭ حاسد بد فہم ہوتا ہے۔ حضرت سفیان غوری

٭ نماز روزہ اچھی چیز ہے لیکن غرور و حسد دل سے دور کرنا ان کو زیادہ اچھا بنا دیتا ہے۔ حضرت ابوالحسن خرقانی

٭ حاسد دشمن پر پتھر پھینکتا ہے مگر وہ واپس اسی کو لگتا ہے اور دشمن ہنستا ہے۔ امام غزالیؒ

٭ تمسخر اکثر دوستی، دل شکنی اور دشمنی کا باعث ہوتا ہے، اس سے دل میں حسد پیدا ہوتا ہے۔ امام غزالیؒ

٭ حسد خباثت قلب کو ظاہر کرتا ہے۔ امام غزالیؒ

٭ طمانیت قلب چاہتے ہو تو حسد سے دور رہو۔ بابا فرید گنج شکرؒ

٭ حسد کو چھوڑنے کی دوا ترک دنیا ہے لیکن جو دنیا کی طرف راغب ہو اسکو حسد لازم ہے خواہ وہ مانے یا مانے۔

٭ تمام لوگوں سے زیادہ حسد کرنے والے رشتہ دار اور ہمسائے ہیں کیونکہ وہ عوام کی نسبت تیرے انعامات کو زیادہ دیکھتے اور حسد کرتے ہیں۔ حضرت ابن سماک

٭ حسد سے بچو کیونکہ آسمانوں میں سب سے پہلے اس گناہ سے اللہ تعالیٰ کی نافرمانی ہوئی۔

٭ میں عالموں کی شہادت عوام کی نسبت قبول کر سکتا ہوں لیکن ایک عالم کی شہادت دوسرے عالم پر قبول نہیں کر تا کیونکہ عموماً یہ تمام کے تمام حاسد ہوتے ہیں۔ حضرت مالک بن دینار

٭ حاسد زوال نعمت سے خوش ہوتے ہیں۔ حکیم اقلیدس

٭ جو شخص حسد کو دوست رکھتا ہے اسکا نفس قائم دائم نہیں رہتا اور اس کو مرنے سے پہلے مار دیتا ہے۔ حکیم بقراط

٭ حسد محسود تک پہنچنے سے پہلے حاسد کو مار دیتا ہے۔

٭ ہر دشمنی کے زائل ہو جانے کی امید کی جا سکتی ہے سوائے اس دشمنی کے جس کی بنیاد حسد پر قائم ہو۔

٭ حاسد ہر وقت مصیبت میں اور غم میں مبتلا رہتا ہے۔

٭ حسد ایک بیماری ہے جس کا کوئی علاج نہیں۔

٭ فخر اس میں ہے کہ اپنے تھوڑے بہت مال پر بہت قانع رہ کر بیگانے کی ملکیت پر حسد کی نظر نہ ڈالو۔ حضرت اویس قرنی

٭ دولت مند پر حسد مت کرو کیونکہ دولت کی لذتیں فانی اور عارضی ہیں۔

٭ دوسروں کی خوشی اور آسودگی پر حسد نہ کرو اس لیے کہ ان پر سرور زندگی چند روزہ ہے۔ حضرت اویس

٭ صرف گونگے ہی باتونیوں سے حسد کرتے ہیں۔


Share Hasad Quotes in Urdu

Add More Hasad Quotes